ضربِ کلیم: ہو حلقۃ یاراں تو

ہو حلقۃ یاراں تو بریشم کی طرح نرم
رزمِ حق و باطل ہو تو فولاد ہے مومن

Ho Halqa-e-Yaran To Baresham Ki Tarah Naram
Razm-e-Haq-o-Batil Ho To Foulad Hai Momin

A man whose faith is firm and strong is soft as silk in friendly throng:
In skirmish between wrong and right like sword of steel, he stands to fight!

اس دنیا میں مومن کی امتیازی خصوصیات یہ ہیں کہ وہ دوستوں یعنی برادران ملت کے حلقہ میں تو ابریشم کی طرح نرم(رحمدل) ہیں یعنی مسلمانوں کے ساتھ نرمی سے پیش آتاہے اور میدان جنگ میں وہی مومن فولاد کی طرح سخت ہوجاتاہے، یہ شعر قرآن مجید کی آیت کا لفظی ترجمہ ہے،
محمد رسول اللہ والذین معہہ اشداء علے الکفار رحما بینہم
ترجمہ: حضور سرکاردوعالم صلی اللہ علیہ وسلم اللہ بلاشبہ اللہ رسول ہیں، اور جولوگ (مومن) آپکے ساتھ ہیں انکی شان یہ ہے کہ وہ کافروں پر سخت اور آپس میں ایکدوسرے پررحیم ہیں۔

ترجمکار: پروفیسر یوسف سلیم چشتی