بانگِ درا: طلوع اسلام : تُو رازِ کن فکاں ہے، اپنی انکھوں پر عیاں ہو جا

بانگِ درا: طلوع اسلام :  تُو رازِ کن فکاں ہے، اپنی انکھوں پر عیاں ہو جا

BANG-E-DRA-163) TULU-E-ISLAM (طلوع اسلام) (THE RISE OF ISLAM)

You are the secret of creation, see yourself in your eyes;
Share the secret of your own self, become the spokesman of God.


تُو رازِ کن فکاں ہے، اپنی انکھوں پر عیاں ہو جا
خودی کا راز داں ہو جا، خدا کا ترجماں ہو جا


Tu Raaz-E-Kun Fakan Hai, Apni Ankhon Par Ayan Ho Ja
Khudi Ka Raazdan Ho Ja, Khuda Ka Tarjuman Ho Ja


ہوس نے کر دیا ہے ٹکڑے ٹکڑے نوعِ انساں کو
اُخُوّت کا بیاں ہو جا، محبّت کی زباں ہو جا


یہ ہندی، وہ خُراسانی، یہ افغانی، وہ تُورانی
تُو اے شرمندۂ ساحل! اُچھل کر بے کراں ہو جا


غبار آلودۂ رنگ و نَسب ہیں بال و پر تیرے
تُو اے مُرغِ حرم! اُڑنے سے پہلے پَرفشاں ہو جا


خودی میں ڈوب جا غافل! یہ سِرِّ زندگانی ہے
نکل کر حلقۂ شام و سحَر سے جاوداں ہو جا


مَصافِ زندگی میں سیرتِ فولاد پیدا کر
شبستانِ محبّت میں حریر و پرنیاں ہو جا


گزر جا بن کے سیلِ تُند رَو کوہ و بیاباں سے
گلستاں راہ میں آئے تو جُوئے نغمہ خواں ہو جا


ترے علم و محبّت کی نہیں ہے انتہا کوئی
نہیں ہے تجھ سے بڑھ کر سازِ فطرت میں نَوا کوئی