عروج آدم خاکی کے منتظر ہيں تمام

عروج آدم خاکی کے منتظر ہيں تمام

عروج آدم خاکی کے منتظر ہيں تمام
يہ کہکشاں ، يہ ستارے ، يہ نيلگوں افلاک

تشریح:
کہکشاں، ستارے اور نیلے نیلے آسمان یہ سب کے سب اس انتظار میں بیٹھے ہیں کہ خاکی انسان کب عروج کی منزلیں طے کرتا ہوا اوپر پہنچتا ہے؟
(شرح غلام رسول مہر)

ﷲ نے تمام کائنات کو محض اس لیے پیدا کیا ہے کہ انسان اپنی خودی کو مرتبۂ کمال تک پہنچا کر اس پر حکومت کرے۔ کہکشاں، ستارے اور نیلگوں افلاک یہ سب انسان کے خادم ہیں۔
(شرح یوسف سلیم چشتی)

Urooj-e-Adam-e-Khaki Ke Mutazir Hain Tamam
Ye Kehkashan, Ye Sitare, Ye Neelgoon Aflaak

The galaxies, the planets, the firmament, are all
Waiting for man’s rise, like a star in heaven