حمد : مولا مولا مولا مولا مجھے رنگ دے

حمد : مولا مولا مولا مولا مجھے رنگ دے

مولا مولا مولا مولا مجھے رنگ دے مجھے رنگ دے مولا مولا
مجھے رنگ دے مجھے رنگ دے
مجھے اپنے رنگ میں رنگ دے
تو کریم ہے تو رحیم ہے
تیری ذات سب سے عظیم ہے
نہیں تجھ سا بھی کوئی دوسرا
تو خبیر ہے تو علیم ہے

یہ لطافتیں یہ عنایتیں
یہ تیرے کرم کی وضاحتیں
جو چمن میں ہے تو نسیم ہے
جو گلوں میں ہے تو شمیم ہے

تو بعید بھی تو قریب بھی
تو محب بھی ہے تو حبیب بھی
تو حرارت دل عاشقان
تو نشان عقل سلیم ہے

تو ہے راز و ذات و صفات کا
کہیں شان خلق محمدی
کہیں حسن لطف کلیم ہے

تو حبیب بھی تو حفیظ بھی
تو رحیم بھی تو کریم بھی
تو بشیر بھی تو نصیر بھی
تو کبیر ہے تو حلیم ہے

تو میرے خیالوں کے گلشنوں
میں بسی مثال شمیم ہے
تو میرے یقین کی وسعتوں
میں خرام موج نسیم ہے

ہے دعائے بسمل نیم جان
کہ میری خطاؤں کو بخش دے
ہے مجھے تو تیرا ہی آسرا
تو حلیم ہے تو رحیم ہے
مجھے رنگ دے مجھے رنگ دے
مجھے رنگ دے مجھے رنگ دے
مجھے اپنے رنگ میں رنگ دے

البم : رنگ دے مولا

نینا خان