نعتِ رسولﷺ : بیاں کیا کرے کوئی شانِ محمد ﷺ

نعتِ رسولﷺ : بیاں کیا کرے کوئی شانِ محمد ﷺ

بیاں کیا کرے کوئی شانِ محمد ﷺ
خدا خود ہے جب مدح خواں محمد ﷺ

یہاں شمع روشن ہے عشقِ نبیﷺ کی
مرا قلب ہے شمعدانِ محمد ﷺ

جہاں عظمتیں سر جھکائے ہوئے ہیں
وہ ہے بیتِ حق یا مکانِ محمد ﷺ

گلستانِ عالم کو بخشی بہاریں
ہے کتنا سخی گلستانِ محمد ﷺ

دعا پر دعا دینا بدلے جَفا کے
بڑا سخت تھا امتحانِ محمد ﷺ

چمکتے ہیں مِدحت کے یاں چاند تارے
کہ یہ بزم ہے آسمانِ محمد ﷺ

محمد ﷺ کو عرشِ اولی پر بُلا کر
خدا بن گیا میزبانِ محمد ﷺ

اسی کے ہیں سائے میں طُوبٰی کی شاخیں
کچھ اتنا ہے اونچا نشانِ محمد ﷺ

کلامِ محمد ﷺ کلامِ خدا ہے
خدا کی زباں ہے زبانِ محمد ﷺ